“ایک آوارہ کتا لائو اور 200 روپے انعام پاو¿” حکومت نے پھر سکیم متعارف کروا دی

پشاور(ویب ڈیسک) محکمہ لائیو سٹاک خیبر پختونخوا نے شہر میں آوارہ کتوں کو پکڑنے کر لانے پر نقد انعام کا اعلان کیا ہے۔پشاور میں آوارہ کتوں کی تعداد زیادہ ہونے کی وجہ سے شہری پریشان ہیں، اس پریشانی کو دور کرنے کے لئے محکمہ لائیو سٹاک نے شہریوں کو خوشخبری سنا دی ہے اور آوارہ کتے کو لائیو سٹاک کے دفتر پہنچانے پر 200 روپے نقد دینے کی پیشکش کی ہے۔مذکورہ سکیم آوارہ کتوں کی افزائش روکنے کے لئے سامنے لائی گئی ہے اور اس مقصد کے کے لئے لائیو سٹاک ضلع پشاور نے چنگ چی موٹر سائیکل بھی خریدی ہے تاکہ شہر کے گلی محلوں میں پھرنے والے آوارہ اور پاگل کتوں کو جمع کرکے دفتر منتقل کیا جاسکے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق اس حوالے سے ڈائریکٹر محکمہ لائیو سٹاک ضلع پشاور معصوم علی خالد نے بتایا کہ آوارہ کتوں کو مارنا ایک غیر شرعی فعل اور جانوروں کے حقوق کے منافی ہے، شہر کی گلیوں کوآوارہ کتوں سے محفوظ کرنے اور ان کی افزائش روکنے کیلئے اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں جس میں عوام کو اپنا حصہ ڈالنے کی ضرورت ہے۔ محکمہ لائیو سٹاک آوارہ کتوں کی افزائش روکنے کے لئے ضلعی انتظامیہ پشاور کے تعاون سے منفرد پیکیج لایا ہے جس کے تحت فی کتا 200 روپے ادا کئے جائیں گے۔

معصوم علی خالد نے کہا کہ محکمہ لائیو سٹاک پشاور میں جانوروں کے لئے خصوصی آپریشن تھیٹر کا قیام عمل میں لایا گیا ہے جس میں جدید الٹراسائونڈ کی سہولت بھی دستیاب ہے جب کہ جانور کی سرجری 2 سے 5 میں منٹ میں کی جاتی ہے۔یاد رہے کہ گزشتہ ماہ کنٹونمنٹ بورڈ کے اہلکاروں کی جانب سے آوارہ کتوں کو مارنے کی ویڈیو وائرل ہونے پر شدید تنقید کی گئی تھی جس کے بعد مذکورہ اقدامات اٹھانے کی ضرورت پیش آئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں