مفاد پرست اور سازشی ٹولے کوپارٹی کا خیر خواہ کہلوانا زیب نہیں دیتا،عوام جانتے ہیں انتخابی مہم کے نام پرراجہ اقبال سے پٹرول تک کون وصول کرتا رہا،راجہ شفیق پلاھلوی

لندن(اے جے کے نیوز) چڑھوئی سے ن لیگ کی شکست چند ضرورت سے زیادہ عقلمند پروفیسر،نام نہاد ٹولے اور زمینی حقائق سے حاری افرادکی وجہ سے ہوئی ۔ مفاد پرست ٹولے کے جھوٹے وعدوں ، ناقص حکمت عملی کے باعث عوام نے ن لیگ کے خلاف ووٹ دیئے اور جماعت کو ناقابل تلافی نقصان ہوا ۔ ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ ن آزادکشمیر کے میڈیا ایڈوائزر اورچیئرمین اوورسیز راجہ شفیق پلاہلوی نے اپنے بیان میں کیا ۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن مہم کے دوران بیرونی مداخلت کی باتیں کرنے والے شاید یہ بھول گئے ہیں کہ گزشتہ الیکشن میں انتخابی مہم کیلئے گاڑی کے پٹرول تک کون وصول کرتا رہا اور ہمیشہ اپنے مفاد کو ترجیح دینے والے ٹولے کوآج عوام اور جماعت کا خیر خواہ بننا زیب نہیں دیتا ۔ ہمارا ماضی اور حال گواہ ہے کہ ہمیشہ بے لوث ہو کر عوامی خدمت اور کارکنوں کی عزت وتوقیرکیلئے سیاست کی ۔ بیرونی مداخلت کی باتیں کرنیوالے اوقات میں رہیں ورنہ کچا چٹھہ عوام کے سامنے کھول دوں گا مجبور نہ کیا جائے کہ اینٹ کا جواب پتھر سے دیں کرعوام کوحقائق سے آگاہ کروں کہ کون کتنے پانی میں ہے ۔ بے بنیاد الزامات اور گھٹیا الزامات کا جواب دینا بخوبی جانتا ہوں ۔ چڑھوئی کے عوام باشعور ہیں انہیں کھوٹے کھرے کی تمیز ہے وہ جانتے ہیں کہ کون پارٹی کیساتھ کتنا مخلص اور کسے صرف اپنے پاءوگوشت کی فکرہے ۔ بیرونی مداخلت کی باتیں کرنیوالے نہ بھولیں چند مفاد پرستوں اورقبضہ مافیا کی وجہ سے چڑھوئی کی جھوگی برادری نے آج تک ن لیگ کی حمایت نہیں کی انہی مسترد شدہ عناصر کی پالیسیوں سے عوام تنگ آچکے ہیں ۔ بے بنیاد پروپیگنڈہ کرنیوالوں کیساتھ مسجد میں بیٹھ کر مناظرہ کرنے کوتیار ہوں کہ کون سچا،کون جھوٹا ہے اور کس نے جماعت کے نام پرمال بنایا اور چند ٹکوں کی خاطر اپنے ضمیر کوبیچا ۔ جب تک زندہ ہوں اصولوں پرقائم اور کاربند رہوں گا اور کارکنوں کی عزت نفس پرآنچ نہیں آنے دوں گا ۔ اوچھے ہتھکنڈے اور بے بنیاد پروپیگنڈہ ہ میں اپنی منزل سے دور نہیں کرسکتا ۔ سستی شہرت کمانے والے قبضہ مافیا اور مسترد شدہ ٹولے کوآٹے دال کا بھاءو معلوم ہوجائے گا ۔ جھوٹ اور الزامات کی سیاست کرنیوالوں کے تعلیمی معیاراور قابلیت پرصرف افسوس ہی کرسکتا ہوں ۔ چڑھوئی کے نام نہاد ٹولے کی وجہ سے ن لیگ کوشکست ہوئی اور آج یہی ٹولہ آج عوام کے سامنے پارٹی کا مخلص بن کر عوام کو ورغلا رہا ہے لیکن شاید یہ ان کی بھول ہے کہ باشعور عوام ان کے مفادات اور سستی شہرت کے حصول کوبھول گئے ہیں ۔ میجر منصفداد کے دور میں بھی اسی ٹولے کی وجہ سے پارٹی کو نقصان ہوا جو آج نئے انداز میں عوام کو بے وقوف بنا رہاہے ۔ بھڑکیں مارنے والے آج تک چڑھوئی کی اقلیتی برادری کا ایک ووٹ بینک بھی پارٹی کیلئے نہ بنا سکے ۔ راجہ اقبال کو سبز باغ دکھانے والوں کو پارٹی یا لیگی امیدوار سے کوئی سروکار نہیں ان کی سیاست کا مقصد صرف سستی شہرت حاصل کرکے مفاد اٹھانا ہے ہ میں مجبور نہ کیاجائے عوام کواصلیت کا پتہ چل سکے کہ کون ہے وہ جو انتخابی مہم چلانے کیلئے پٹرول تک وصول کرتا رہا اورآج پارٹی اورراجہ اقبال کا خیرخواہ بنا پھرتا ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں