گاڑیوں کی چیکنگ جاری کردہ نئے ایس او پیز جاری، شہریوں کی بڑی ”پریشانی“ ختم کردی گئی

لاہور(کرائم رپورٹر)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب کیپٹن (ر) عارف نواز خان نے صوبے بھر میں شہریوں کی سہولت کے لئے بین الاضلاعی اور بین الصوبائی چیک پوسٹوں کے علاوہ تمام پولیس ناکوں کو فوری ختم کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا ہے کہ پولیس فورس شہریوں اورگاڑیوں کی چیکنگ کیلئے جاری کردہ نئے ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد یقینی بنائے۔ انہوں نے مزیدکہاکہ پولیس ناکوں کی بجائے سی سی ٹی وی کیمروں اور پٹرولنگ کے ذریعے شاہرات پر مانیٹرنگ اور نگرانی کا عمل سر انجام دیا جائے اور ناکوں پر کھڑے رہنے کی بجائے پولیس افسران واہلکار جرائم کے خاتمے کے لیے آپریشنل سرگرمیوں میں اپنا فعال کردار ادا کریں۔انہوں نے مزیدکہاکہ بین الصوبائی اور بین الاضلاعی چیک پوسٹوں پر دوران چیکنگ شہریوں کے ساتھ بد سلوکی یا غیر ذمہ دارانہ رویے کا واقعہ سامنا آیا تو متعلقہ ڈی ایس پی براہ راست ذمہ دار ہوگا اور ذمہ داران کے خلاف ڈسپلن میٹرکس کے مطابق محکمانہ اور قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔انہوں نے مزیدکہاکہ صوبے بھر میں شہریوں کواگر کسی جگہ پر پولیس کے ناکے کی موجودگی کے حوالے سے کوئی شکایت ہے تو وہ8787آئی جی پی کمپلینٹ سنٹر پر اپنی شکایات درج کرواسکتے ہیں، ذمہ داراہلکاروں کے خلاف کاروائی میں کوئی تاخیر نہیں کی جائے گی۔ انہوں نے مزیدکہاکہ فری رجسٹریشن سے جرائم کی شرح میں نظر آنے والے اضافے کو کنٹرول کرنے کیلئے پولیس ٹیمیں اپنی پرفارمنس کو مزید موثر بنائیں اور ڈکیتی، قتل اور ااغوا سمیت دیگرجرائم کی و ارداتوں کی روک تھام کیلئے سینئر افسران سپیشل ٹیمیں بنا کر ان وارداتوں میں ملوث ملزمان کو قانون کی گرفت میں لائیں۔ انہوں نے مزید کہاکہ چہلم حضرت امام حسین علیہ سلام کے موقع پر اے کیٹیگری کے جلوسوں اور مجالس کو فور لئیر سیکیورٹی فراہم کی جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سنٹرل پولیس آفس میں ویڈیو لنک کانفرنس کے دوران صوبے کے تمام فیلڈ افسران کو ہدیات دیتے ہوئے کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں