توہین مسجدنبوی کی خبریں من گھڑت اور آزادی دشمن عناصرکی سازش،جعلی آڈیو کلپس اورخبریں بلیک میل نہیں کرسکتیں ،ڈاکٹرتوقیرگیلانی

کوٹلی(اے جے کے نیوز)  جموں کشمیر لبریشن فرنٹ کے زونل صدر ڈاکٹر توقیر گیلانی نے اپنے خلاف بعض اخبارات میں توہین مسجد نبوی کرنے کی خبروں کی شدید مذمت کرتے ہوئے ایسی خبروں کو بیہودہ، من گھڑت اور شر انگیز قرار دیکر ایسے کسی عمل کی سختی سے تردید کی ہے۔ ڈاکٹر توقیر گیلانی نے کہا کہ کچھ لبریشن فرنٹ اور آزادی دشمن کردار تسلسل کے ساتھ جھوٹے اور بے بنیاد پروپیگنڈے اور جعل سازی سے اخبارات اور سوشل میڈیا میں انکی کردار کشی میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ ایک متحرک سیاسی کارکن ہیں اور روزانہ کی بنیاد پر سینکڑوں لوگوں سے ملتے جلتے، گفتگو کرتے اور عوامی اجتماعات سے خطاب کرتے ہیں ۔ وہ مذہب تو کیا کسی عام آدمی کی توہین کا بھی نہیں سوچ سکتے۔ ڈاکٹر توقیر نے کہا کہ گزشتہ ایک سال سے تسلسل کے ساتھ ان کے خلاف سوشل میڈیا پر شر انگیز اور زہریلی کمپین چلائی جا رہی ہے۔ ان کے گھر ، خاندان اور بیوی بچوں کو ٹارگٹ کیا جا ریا ہے۔ سوشل میڈیا پر سیکنڑوں فیک آئی ڈیز ان کی کردار کشی میں مصروف ہیں اور جعلی خبریں، آڈیو کلپس اور مختلف ایڈٹ شدہ تصاویر لگا کر ان کے خلاف گالم گلوچ، دھمکیوں اور کردار کشی کی مہم چلائی جا رہی ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ اس طرح کی جعل سازی سے لبریشن فرنٹ اور اس کے قائدین کو کسی صورت حق بات کرنے اور آزادی کی تحریک چلانے سے نہیں روکا جا سکتا۔ انہوں نے اپنے خلاف توہین مذہب کے حوالے سے چلنے والی جعل سازی کی سختی سے تردید کرتے ہوئے کہا کہ ریاست جموں کشمیر کی آزادی کے دشمن اس طرح کی گھٹیا اور نیچ حرکات اور سازشوں کے ذریعے کبھی اپنے مذموم عزائم میں کامیاب نہیں ہونگے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں