آزادکشمیر،درندہ صفت باپ نے بیٹی کوقتل کرنے کے بعدایساگھٹیاکام کیاکہ جان کرآپ کوبھی شدیدغصہ آئیگ

مانسہرہ(اے جے کے نیوز)  مانسہرہ آزاد کشمیر کا سنگدل ظالم باپ نزاکت پهول جیسی بچی نور صباء کو قتل کرنے کے بعد سلفی بناتا رہا ماں کے لیے رونے پر باپ نے اپنی ڈیڑھ سالہ بچی کو قتل کر دیا ،ملزم اس قبل اپنی بیوی کو طلاق دے چکا ہے، مقامی لوگوں کے مطابق ملزم اپنی مطلقہ اہلیہ سے معصوم بچی کو واپس لیکر آیا تھا ، بچی والدہ کے لئیے رو رہی تھی کہ گلہ دبا کر مار دالا۔ قتل کو طبعی موت کا رنگ دینے کی کوشش بچی کی والدہ نے ناکام بنا دی تفصیل کے مطابق نزاکت شاہ ولد صادق شاہ نامی شخص جو کہ جرید کا رہائشی ہے آجکل خاکی میں رہتا ہے نے عید کے دوسرے دن خاکی میں اپنی معصوم پھول جیسی بیٹی نورصباء کو جان سے مار دیا اور قتل کے بعد سنگدل ظالم باپ رات کو بارہ بجے نیٹ پہ بچی کی نعش کے ساتھ سیلفی بنا کر تصویریں لگاتا رہا مقامی لوگوں اور بچی کی والدہ کی مداخلت پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر نزاکت شاہ کو گرفتار کر لیا جبکہ پوسٹ مارٹم کے بعد بچی نعش کو ورثاء کے حوالے کر دیا اہلیان محلہ کے مطابق ملزم شروع سے ہی مختلف جرائم پیشہ سرگرمیوں لڑائی جھگڑوں میں ملوث رہتا تھا جبکہ 4 ماہ پہلے ہی اپنی بیوی کو طلاق دے چکا تھا معصوم بچی کے قتل کی خبر علاقے میں جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی بچی کے ورثاء اور اہل محلہ نے ملزم کو مارپیٹ کے بعد مقامی پولیس کے حوالے کر دیا

azad kashmir, murder in azad kashmir,father kill her daugther

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں