76

بڑے ملک میں ایک ایساپہاڑجوہر30 سال بعدانڈے دیتاہے

یہ دنیا عجائبات اور قدرتی مناظر کا مجموعہ ہے ہر چیز احساس دلاتی ہے کہ اسے بنانے والا کوئی موجود ہے انہی میں سے ایک چین کا انڈے دینے والا پہاڑ بھی ہے جو ہر 30 برس بعد گول اور بیضوی پتھریلے انڈے نما پتھر خارج کرتی ہیں اور ماہرین اس کی وجہ جاننے کی کوشش کررہے ہیں۔ چین کے صوبہ گیاژاؤ کے علاقے قیانان بوئی میں ایک پہاڑ موجود ہے جس کا نام چین دا یا منڈارن ہےجس نے عشروں سے ماہرینِ ارضیات کو حیرت زدہ کررکھا ہے۔ اس پہاڑی کی اونچائی 9 فٹ اور لمبائی 65 فٹ ہے اور پہاڑی کی سطح پر درجنوں پتھر گول انڈوں کی شکل میں موجود ہیں۔دھیرے دھیرے یہ انڈے مزید ظاہر ہوتے ہیں یہاں تک کہ پہاڑ سے الگ ہوکر نیچے گرجاتے ہیں۔ یہاں سے قریبی دیہات کے لوگ کہتے ہیں کہ ہر 30 سال بعد یہاں مزید انڈے بنتے ہیں۔ابتدائی اندازہ ہے کہ پوری پہاڑی سخت پتھروں پر مشتمل ہے لیکن اس کا ایک حصہ کیلشیئم کاربونیٹ کے پتھروں پر بھی مشتمل ہے جو موسمی اثرات سے گھلتے رہتے ہیں۔ پہاڑ کا یہ حصہ کیمبرین عہد سے تعلق رکھتا ہے جو 50 کروڑ سال قدیم ہے۔ تاہم ماہرین اب بھی گول پتھروں کا معمہ حل نہیں کرسکے ہیں

ہر 30 سال بعد انڈے دینے والا معجزاتی پہاڑ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں