آسٹریلوی کرکٹرکوسوئی ہوئی خاتون سے جنسی زیادتی کرنے پرپانچ سال قیدکی سزا سنادی گئی

لندن(اے جے کے نیوز)  سوتی ہوئی خاتون کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے والے آسٹریلوی آل راﺅنڈر ایلکس ہیپ برن کو 5 برس قید کی سزا سنادی گئی ہے۔ 23 سالہ کرکٹر وورکیسٹر شائر کی جانب سے انگلش کاﺅنٹی کھیلتا تھا۔

آسٹریلوی آل راﺅنڈر ایلکس ہیپ برن نے 2017 میں ایک خاتون کو دھوکے کے ساتھ جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔ مقدمے کی سماعت کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ متاثرہ خاتون ایلکس کے ساتھی کرکٹر جوئی کلارک سے ایک نائٹ کلب میں ملی اور دونوں میں دوستی ہوگئی۔ بعد ازاں خاتون جوئی کلارک کے کمرے میں آگئی لیکن وہاں بتیاں بجھا کر ایلکس نے اس کے ساتھ زیادتی کی۔ خاتون کا کہنا ہے کہ پہلے وہ یہی سمجھتی رہی کہ اس کے ساتھ جسمانی تعلق قائم کرنے والا شخص جوئی کلارک ہے لیکن جب اسے آسٹریلین لہجے کا احساس ہوا تو اس پر انکشاف ہوا کہ یہ جوئی کلارک نہیں ایلکس ہے۔

ایلکس ہیپ برن کو سزا سنانے والے ہیرفورڈ کراﺅن کورٹ کے جج نے کرکٹر کو مخاطب کرکے کہا ’ کیا تم خود کو خواتین کیلئے خدا کا تحفہ سمجھتے ہو، تم ریپ کو ایک عام سا لفظ سمجھتے ہو لیکن اس خاتون کو دیکھو کہ کس طرح تمہاری وجہ سے اس کی زندگی تباہ ہو کر رہ گئی، تم نے اسے عورت نہیں بلکہ ایک گوشت کا ٹکڑا سمجھا ‘۔

مقدمے کے دوران یہ بات بھی سامنے آئی کہ آسٹریلوی کرکٹر ایلکس ہیپ برن اور برطانوی کھلاڑی جوئی کلارک قریبی دوست ہیں اور دونوں ہی زیادہ سے زیادہ خواتین کے ساتھ جسمانی تعلق قائم کرنے کا مقابلہ کر رہے تھے۔ جیوری کی جانب سے واٹس ایپ پیغامات کا جائزہ لینے کے بعد یہ بات بھی سامنے آئی کہ ایلکس نے کم از کم 60 خواتین کے ساتھ تعلق قائم کیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں