دوران پرواز شرمناک حرکتیں کرنے والے جوڑوں کو فضائی عملہ کیسے پکڑتا ہے؟ ائیرہوسٹس نے انتہائی دلچسپ بات بتادی

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) ’میل ہائی کلب‘ کی شرمناک اصطلاح ایسے جوڑوں کے لیے استعمال کی جاتی ہے جو فضائی سفر کے دوران شرمناک حرکات کرتے ہیں۔ اب ایک ایئرہوسٹس نے انتہائی دلچسپ بات بتا دی ہے کہ جہاز کا عملہ ایسے جوڑوں کو کیسے پکڑتا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق سڈنی کی رہائشی اس ایئرہوسٹس نے بتایا ہے کہ ”ہم لوگ ہوائی جہاز کے ٹوائلٹس پر نظر رکھتے ہیں کیونکہ یہی وہ جگہ ہے جہاں ’میل ہائی کلب‘ میں شامل ہونے کے خواہش مند جوڑے اکٹھے ہوتے ہیں اور شرمناک کام کرتے ہیں۔

ایئرہوسٹس کا کہنا تھا کہ اگر ٹوائلٹ کا دروازہ کافی دیر تک اندر سے لاک ہو تو ہم لوگ دروازے کے ساتھ کان لگا کر اندر کی آوازیں سننے کی کوشش کرتے ہیں اور ہمیں پتا چل جاتا ہے کہ اندر کوئی میل ہائی کلب جوڑا موجود ہے یا کوئی مسافر رفع حاجت کے لیے اندر گیا ہے۔ ایئرہوسٹس نے بتایا کہ ”اگرچہ ہم اکثر ایسے جوڑوں کو پکڑنے کے بعد نظر انداز کردیتے ہیں لیکن ایک بار ہم نے ایک جوڑے کو پکڑا اور ہمارے منیجر نے انہیں ’گارڈ آف آنر‘ دینے کا فیصلہ کر لیا۔ انہوں نے ہم سب کو ٹوائلٹ کے باہر ایک قطار میں کھڑے کر دیا۔ یہ قطار ٹوائلٹ سے مسافروں کی سیٹوں کے درمیانی راستے سے ہوتی ہوئی اس جوڑے کی سیٹوں تک جاتی تھی۔ جونہی وہ جوڑا باہر نکلا تو ہم نے ان کا استقبال کیا۔ قطار کے آخر میں ہمار امنیجر شیمپین کی ایک بوتل ہاتھ میں لیے ان کی سیٹوں کے پاس کھڑا تھا جو اس نے اس جوڑے کو پیش کی۔ جب اس جوڑے نے ہمیں اس طرح ٹوائلٹ کے باہر دوریہ قطار بنائے دیکھا تو لڑکی بہت شرمندہ سی ہو گئی جبکہ اس کے ساتھ موجود لڑکا پریشان ہو گیا کہ اب شاید ان کے خلاف قانون کارروائی کی جائے گی لیکن تمام عملہ ان کو ’گارڈ آف آنر ‘ دینے کے بعد چپ چاپ اپنے معمول کے کام میں لگ گیا۔“

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں