206

برطانیہ،گھروں پرنیاٹیکس نافذ،لینڈلارڈ پریشان،احتجاج اورپٹیشن دائرکرنے پرغور

کوونٹری(اے جے کے نیوز)کوونٹری سٹی کونسل نے غیرمعیاری گھروں پرنیاٹیکس نافذکرنے کی حکمت عملی طے کرلی۔لینڈلارڈپریشان ہوگئے۔کونسل کے فیصلے احتجاج اورپٹیشن دائرکرنے پرسوچ بچارشروع کردی۔مسلم ریسورس سنٹرمیں لینڈلارڈکااجلاس ہواجس میں سٹی کونسل کے ڈپٹی لیڈرعبدالسلام،کونسلرپرویزاختراوربیرسٹرطارق نے شرکت کرکے کمیونٹی افرادکوبتایاکہ وہ اپنے حقوق کے حصول کیلئے آوازبلندکرسکتے ہیں اگرانہیں کونسل کافیصلہ منظورنہیں تووہ فیصلے کے خلاف پٹیشن سائن کے ذریعے اپنااحتجاج ریکارڈکرواسکتے ہیں۔بیرسٹرشبیرنے اس موقع پراحتجاج کرتے ہوئے کہاکہ فیصلہ سے دکھ ہوالینڈلارڈپراضافی اخراجات ڈال دیئے گئے ہیں جوکسی صورت قبول نہیں۔کونسل کوفیصلے سے قبل عوام کواعتمادمیں لیاجاناچاہئے تھا۔انہوں نے انتہائی جذباتی اندازمیں خطاب کرتے ہوئے کہاکہ کونسل کے فیصلے پرکوونٹری فلاورزکے ممبران نے کہاکہ فیصلے سے قبل عوام کواعتمادمیں لیاجاناچایئے تھا۔انہوں نے کہاکہ کوونٹری کے ایک ایک مخصوص علاقے میں نیاقانون نافذکیاجارہاہے جوزیادتی ہے جبکہ کرایہ داروں کاکہناہے کہ اس قانون سے غیرمعیاری گھروں کوبہترکرنے میں مددملے گی۔رہائش بہتراورصحت افزاہوگی۔نئے قوانین کوسمجھنے کی ضرورت ہے۔یہ لینڈلارڈاورکرایہ داروں دونوں کیلئے بہترثابت ہوگا۔کونسل کے ڈپٹی لیڈرعبدالسلام اورکونسلرپرویزاخترنے جذباتی سوالات کاجواب بڑے حوصلے سے دیئے اورکہاکہ ان کی آوازارباب اختیارتک پہنچائیں گے۔انہیں اپنے حق کیلئے آوازاٹھانے کاپوراحق حاصل ہے۔عوام پٹیشن سائن کریں۔اس موقع پرلینڈلارڈنے کہاکہ حکومت نے عوام پربلاوجہ بوجھ ڈالا۔حکومت عوام سے پیسہ کماناچاہتی ہے اوراپناخزانہ بھرناچاہتی ہے۔کونسل کے فیصلے سے عوام مہنگائی کے بوجھ تلے دب جائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں