لیڈرول کے بدلے پروڈیوسرنے مجھ سے ایک رات کامطالبہ کیا،معروف بھارتی اداکارہ کاانکشاف

ممبئی(شوبزڈیسک) معروف بھارتی اداکارہ شروتی مراٹھے نے الزام عائد کیا ہے کہ انہیں ایک بار کاسٹنگ کاﺅچ کا سامنا کرنا پڑا۔ جب وہ ایک فلم میں لیڈ رول کیلئے آڈیشن دے رہی تھیں تو پروڈیوسر نے ان سے ’کمپرومائز‘ اور ’ ایک رات‘ کا مطالبہ کیا۔

بھارت کی مراٹھی فلم انڈسٹری کی صف اول کی اداکارہ شروتی مراٹھے بھی می ٹو مہم کا حصہ بن گئی ہیں ۔ انہوں نے اپنے کیریئر کے دوران پیش آنے والے کاسٹنگ کاﺅچ کے واقعے کا انکشاف کیا ہے۔ اداکارہ کے مطابق ایک بار فلم میں لیڈرول کیلئے ان کی ملاقات ایک پروڈیوسر سے ہوئی جس نے ان کا آڈیشن لیا۔ شروع میں تو سب کچھ پروفیشنل تھا لیکن جلد ہی پروڈیوسر نے ’ کمپرومائز‘ اور ’ایک رات‘ جیسے الفاظ استعمال کرنا شروع کردیے۔

اداکارہ نے بتایا کہ وہ پروڈیوسر کی باتوںمیں نہیں آئیں بلکہ اس سے سوال پوچھا کہ ’ اگر آپ رول کے عوض میرے ساتھ سونا چاہتے ہیں تو اس فلم میں ہیرو کا رول کرنے والے شخص کو کس کے ساتھ سونا پڑ رہا ہے؟‘۔

شروتی مراٹھے کا کہنا ہے کہ انہوں نے اس واقعے کے بعد کچھ دوستوں سے اس بات کا تذکرہ کیا جنہوں نے اس پراجیکٹ سے کنارہ کشی اختیار کرنے کا مشورہ دیا۔ ’ میں نے صرف ایک منٹ کی بہادری دکھائی تو میں بچ گئی، اس روز میں اپنے لیے کھڑی نہیں ہوئی تھی بلکہ میں ان تمام عورتوں کی آواز بنی جنہیں کم تر سمجھا جاتا ہے‘۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں