405

کوٹلی،ساجدچوہدری کی کارچوری کیس کاڈراپ سین ہوگیا،پی ٹی آئی رہنما سرخرو

کوٹلی (اے جے کے نیوز)کوٹلی کے مشہور کار چوری سکنڈل کا ڈراپ سین ہوگیا۔ساجد چوہدری کے خلاف درج مقدمہ ہائی کورٹ کے حکم پر خارج۔ضبط شدہ کار بھی واگزار کردی گئی۔پولیس کے ایڑی چوٹی کے زور کے باوجود موصوف سرخرو ہو گئے۔مبارک باد دینے والوں کا بھی تانتا بند گیا۔تفصیلات کے مطابق چند ماہ قبل تھانہ کوٹلی میں ایک مقدمہ درج ہوا جس میں معروف قانون دان اور پی ٹی آئی کے متحرک رہنماء ساجد چوہدری ایڈووکیٹ کو شامل کیا گیا۔اس کی کار بھی پولیس نے ضبط کر لی مگر ساجد چوہدری اپنی بے گناہی ثابت کرنے کے لیے ہائی کورٹ پہنچ گے معزز عدالت نے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما سابق امیدوار اسمبلی ساجد چوہدری ایڈووکیٹ کی نہ صرف گاڑی واگزار کر نے کا حکم صادر کیا بلکہ ان کے خلاف درجFIR خارج کرنے کے بھی احکامات صادر فرما دئیے۔اس طرح ساجد چوہدری نے نہ صرف اپنی بے گناہی ثابت کردی بلکہ ساجد چوہدری نے سٹی تھانہ سے اپنی گاڑی بھی وصول کر لی۔اس کیس میں ساجد چوہدری پر چوری شدہ گاڑی خریدنے کے الزام لگایا گیا تھا جو ثابت نہ ہوسکا۔ معروف قانون دان،ایڈووکیٹ سپریم کورٹ آزاد جموں و کشمیر ساجد چوہدری ایڈووکیٹ کے خلاف مقدمہ درج کر کے ان کے استعمال میں آنے والی گاریوں میں سے ایک گاڑی ضبط کی گئی تھی۔مزکورہ گاڑی سابق SHO سٹی تھانہ سب انسپکٹر طاہر ایوب نے ورکشاپ سے ضبط کر کے ساجد چوہدری اور انہوں نے جس شخص سے گاڑی خرید کی تھی اس کے خلاف مقدمہ درج کر دیا تھا۔ ساجد چوہدری نے اس ساری کاروائی کو ذاتی عناد کی بنیاد قرار دیتے ہوئے IGP کو درخواست دے کر انکوائری کمیشن بھی تشکیل دیا گیا تھا۔اب ہائی کورٹ نے اس اہم کیس میں فیصلہ سناتے ہوئے ساجد چوہدری کو بے گناہ قرار دیا ہے اور گاڑی بھی ساجد چوہدری کے حوالہ کر دی گئی ہے۔ساجد چوہدری سے جب میڈیا ٹیم نے سوال کیا کہ سب انسپکٹر طاہر ایوب سے آپ کی کیا مخالفت ہے تو ان کا کہنا تھا کہ طاہر ایوب میرا عزیز ہے وہ پہلے ہی مشکل وقت سے گزر رہا ہے میرے ساتھ اس نے جو بھی کیا میں اسے معاف کرتا ہوں اللہ کرے کہ وہ منشیات سکینڈل کی انکوائری سے بچ جائے۔ساجد چوہدری کا مزید کہنا تھا کہ اس سارے کیس میں ایس ایس پی کوٹلی عرفان سلیم نے میرٹ پر ان کا بہت ساتھ دیا میں ان کا مشکور ہوں۔ عرفان سلیم ایک نڈر اور بے باک پولیس آفیسر ہیں اللہ ان کو مزید ترقی دے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں