316

خودلذتی کرنے والے مردوں کیلئے انتہائی خطرناک خبر،ایک بارضرورپڑھ لیں

جنسی خودلذتی کا رویہ زمانہ قدیم سے ہی بحث کا موضوع رہا ہے اور آج تک اس کے بارے میں مختلف قسم کی آراءبیان کی جارہی ہیں۔ اگرچہ جدید سائنس اور طبی ماہرین اس کے بارے میں بڑی حد تک متفقہ رائے قائم کرچکے ہیں لیکن ترکی کے ایک مذہبی رہنما نے سائنس کی رائے سے بالکل مختلف رائے کا اظہار کیا ہے۔
 مشاہد شہاد نامی مذہبی رہنما نے ایک ٹی وی پروگرام میں سوال و جواب کی نشست کے دوران بتایا کہ خود لذتی میں مبتلا مرد جب موت کے بعد اٹھائے جائیں گے تو ان کے ہاتھ حاملہ ہوں گے۔ انہوں نے یہ بات ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے بیان کی۔ سوال کرنے والے نوجوان کا کہنا تھا کہ اس کی شادی ہوچکی ہے لیکن اس کے باوجود وہ خودلذتی کی عادت میں مبتلا ہے۔ مذہبی رہنما کا کہنا تھا کہ اگر نوجوان غیر شادی شدہ ہوتا تو وہ اسے شادی کرنے کامشورہ دیتے لیکن شادی شدہ ہونے کے باوجود اس عادت میں مبتلا ہونے والے کو وہ کیا کہیں۔ مذہبی رہنما کی رائے سامنے آنے کے بعد سوشل میڈیا پر ایک نئی بحث کا آغاز ہوگیا ہے اور جہاں کچھ لوگ ان کی حمایت کررہے ہیں وہیں اکثریت اس رائے کو جدید سائنس اور طب سے متصادم قرار دے رہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں