استغفراللہ،ضلع کوٹلی کے دوامام مسجد گرفتار،شرمناک چیزیں برآمد،شرمناک انکشافات نے ہلچل مچادی

کوٹلی(اے جے کے نیوز) سپرنٹنڈنٹ پولیس ضلع کوٹلی عرفان سلیم نے ایک پریس ریلیز کے ذریعہ بتایا ہے کہ پولیس کو اطلاع ملی تھی کہ اقرار حسین شاہ ولد قربان شاہ قوم سید ساکن بٹل کوٹ کھوئیرٹہ اور ظہیر حسین شاہ ولد صادق حسین شاہ قوم سید ساکن چوکی مونگ جو کہ بالترتیب البلال مسجد منجوال،دیہاڑی باغ منڈامساجد میں امام ہیں لیدر جیکٹس میں خفیہ طور پر ہیروئن چھپا کر بیرون ملک سمگل کر رہے ہیں۔ جس پر ان ملزمان کی گرفتاری کے لئے محمد نصیر انسپکٹر ؍SHO تھانہ پولیس کھوئیرٹہ اور عامر فاروق SHO تھانہ پولیس سہنسہ کو مامو رکیا گیا۔ گزشتہ روز کھوئیرٹہ تھانہ کی حدود سے ان ملزمان کو گرفتار کر کے ان کے قبضہ سے دو لیدر جیکٹس جن میں تقریباً دو کلو گرام ہیروئن خفیہ طور پر چھپا رکھی تھی برآمد کر لی گئی ہیں۔ ملزمان نے دوران تفتیش انکشاف کیا کہ انہیں یہ لیدر جیکٹس راجہ مشتاق نوابی کا داماد حافظ منصور سلطانی سپلائی کرتا تھا اس سے قبل بھی وہ مختلف لوگوں کے ذریعہ 05 لیدر جیکٹس جن میں خفیہ طور پر ہیروئن پیک تھی برطانیہ بھجوا چکے ہیں ۔ لیدر جیکٹس برطانیہ پہنچنے پر فی جیکٹ ایک لاکھ روپے معاوضہ ملتا تھا۔ ملزمان کے خلاف زیر دفعہ CNSA 9/Cمقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی گئی ہے۔ ملزم حافظ منصور سلطانی قبل ازیں دبئی روپوش ہے جبکہ ملزم راجہ مشتاق نوابی لیدر جیکٹس کیس میں گرفتار ہو کر ڈسٹرکٹ جیل کوٹلی بند ہے۔ ملزمان نے یہ بھی انکشاف کیا ہے کہ راجہ مشتاق نوابی نیٹ ورک میں ایسے اور لوگ بھی شامل ہیں جو مذہبی تنظیموں کے ساتھ منسلک ہیں اور ہیروئن سمگلنگ میں ملوث ہیں۔ پولیس ان تمام عناصر کو بے نقاب کرے گی اور قانون کے کٹہرے میں لائے گی ۔ کوٹلی پرانا ضلع ہے معاشرہ میں ایسے عناصر کو ہر صورت کیفرکردار تک پہنچایا جائے گا۔ عوام اور میڈیا سے اپیل ہے کہ جرائم کے خاتمہ میں اپنا کردار ادا کرتے رہیں تاکہ ایسے جرائم پیشہ افراد کو نشان عبرت بنایا جا سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں