اوورسیز پاکستانی وطن عزیز کا اہم ترین سرمایہ ہیں,یونائیٹڈ میڈیا فورم

الدمام (سردار صغیر برقی) تیزی سے بدلتے ہوئے دور میں پرنٹ اور الیکٹرونک میڈیا بہت اہمیت کا حامل بنتے جا رہے ہے، میڈیا کے زریعے ہماری زندگی پر بہت سے مثبت اور منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں اور یہ کسی بھی معاشرے کو سنوارنے یا بگاڑنے میں اہم کردار ادا کرتا ہے۔ مثبت سیاست کو پروان چڑھانے اور دیار غیر میں موجود پاکستانی کمیونٹی کی آواز کو ایوان بالا تک پہنچانے کے لیے یونائیٹڈ میڈیا فورم کا قیام عمل میں لایا گیا جس کی افتتاحی تقریب ریاض کے مقامی ہوٹل میں منعقد کی گئی ، تقریب میں سیاسی، سماجی، ادبی اور مذہبی جماعتوں کے عہدیداران کے ساتھ پاکستانی کمیونٹی کی بڑی تعداد نے شرکت کی ۔ پروگرام کا باقاعدہ آغاز تلاوت کلام پاک سے کیا گیا جس کی سعادت قاری محمد قاسم نے حاصل کی ہدیہ نعت حافظ عرفان کھٹانہ نے پیش کی، نظامت کے فرائض یونائیٹڈ میڈیا فورم کے سینئر ایگزیکٹو ممبر ملک کامران نے اپنے شعرانہ انداز میں بخوبی سرانجام دیئے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر یونائیٹڈ میڈیا فورم منیر شاد کا کہنا تھا کہ آ ج کے جدید دور میں میڈیاایک ایسا آلہ بن چکا ہے جو معلومات ،اطلاعات اور مواد پیش کرنے کا بہترین ذریعہ ہے ، میڈیا کا کردار کسی بھی معاشرے میں ایک آئینے کی مانند ہوتا ہے جو اس میں پھیلی ہوئی خرابیوں اور کمزوریوں کی نشان دہی کرتا ہے، جنرل سیکرٹری وسیم خان نے کہا کہ ہمارا مقصد صرف اور صرف مثبت سوچ کے ساتھ مثبت صحافت کرنا ہے اور اس امر کی خاطر کمیونٹی کی خدمت پر بھرپور توجہ دی جائے گی کیونکہ جمہوری عمارت کی بنیاد آزادی رائے پرہی کھڑی ہوتی ہے اور ایک آزاد میڈیا آج کے دور میں رائے عامہ کی تشکیل اور شعور کو جلا بخشنے کا فریضہ عمدگی سے انجام دے رہا ہے ۔ سینئر ایگزیکٹو ممبر خرم خان کا کہنا تھا کہ ہماری پوری ٹیم کی بھرپور کوشش ہو گی کہ بہتر انداز میں کمیونٹی کے تمام پروگرامز جن میں قومی تہواروں سے لے کر مذہبی تہواروں تک بھرپور کوریج دی جائے اور یہ میڈیا کی ہی بدولت ہے جو ان خوشیوں میں چار چاند لگا دیتا ہے، تقریب سے صدر پاک کشمیر میڈیا فورم سعودی عرب حافظ عرفان کھٹانہ نے بھی خطاب کیا اے ۔آر سپورٹس کے چیئرمین آصف شیخ اور الفنار ٹی ایس ایم کے ہیڈ آف ڈیپارٹمنٹ افتخار ہاشمی کی طرف صدر منیر شاد انکی پوری ٹیم کو شیلڈ بھی پیش کی گئی اختتامی دعا کرتے ہوئےحافظ عبدالوحید نے نیک تمناؤں کا بھی اظہار کیا تقریب کے اختتام پہ آئے ہوئے معزز مہمانوں کو پرتکلف عشائیہ بھی پیش کیا گیا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں