وہ کونسے نبی ہیں جنہوں نے سب سے پہلے قلم کااستعمال کیا

(www.dailyajknews.com)حضرت ادریس علیہ اسلام ان جلیل القدرانبیاؑ میں شامل ہیں جن کاذکرقرآن مجیدمیں ان کے ناموں کے ساتھ کیاگیاہے۔حضرت ادریس علیہ اسلام حضرت شیث علیہ اسلام کے دورمیں نبی بنائے گئے۔حضرت شیث علیہ اسلام حضرت آدم علیہ اسلام کے بعدنبوت کے روئے زمین پرنبوت کے امین ٹھہرے۔حضرت ادریس علیہ اسلام حضرت شییث علیہ اسلام سے تعلیمات حاصل کرتے تھے۔حضرت ادریسؑ حضرت شیثؑ اورحضرت نوحؑ کے درمیان کی لڑی ہیں۔حضرت ادریسؑ سے متعلق روایات میں اختلاف ہے کہ آپ علیہ اسلام کس جگہ مقیم رہے۔کئی روایات میں ذکرہے کہ آپ علیہ اسلام مصرکے علاقے اف میں رہے جبکہ کئی روایات میں آپؑ کے قیام کی جگہ کوفہ عراق بتائی گئی ہے۔حضرت ادریس علیہ اسلام کے ذریعے اللہ تعالیٰ نے علوم کاخزانہ انسانوں میں منتقل کیا۔حضرت ادریس علیہ اسلام کے متعلق ہی کہاجاتاہے کہ آپ روئے زمین کے پہلے انسان تھے جنہوں نے کپڑے بننے کاہنرسیکھااورسکھایا۔آپ علیہ اسلام دنیاکے پہلے انسان تھے جنہوں نے قلم کااستعمال کیااورعلم طب کے ساتھ کئی علوم رب تعالیٰ نے انسانوں کوآپؑ کے ذریعے ہی متعارف کروائے۔آپؑ اللہ تعالیٰ کے انتہائی جلیل القدرانبیاؑ میں شمارہوتے ہیں۔وجہ وفات طبی،والدکانام یاردتھا،والدہ کانام برکانہ۔آپ علیہ اسلام پر30 صحائف اتارے گئے جنہیں صحیفہ ادریس کہاجاتاہے۔آپ علیہ اسلام کاشماردنیامیں تیسرے نبی کے طورپرکیاجاتاہے۔آپ علیہ اسلام دنیامیں اللہ تعالیٰ کی طرف سے بھیجے گئے انبیامیں تیسرے نمبرپرآئے۔آپ کے پیشرونبی حضرت شیث علیہ اسلام تھے جبکہ آپ کے بعدیعنی آپ کے جانشین نبی حضرت نوح علیہ اسلام تھے۔رشے میں آپ علیہ اسلام حضرت نوح علیہ اسلام کے پردادالگتے تھے۔قرآن مجیدکی دوسورتوں میں آپ کا ذکر آیاہے۔سورۃ مریم آیت 55 میں خدانے آپ کوسچانبی کہاہے۔سورۃ الانبیاآیت 86.85 میں اسماعیل اورذوالکفل علیہ اسلام کے ساتھ آپ کوبھی صبروالااورنیک بخت کہاگیاہے۔بائبل کے مطابق آپ علیہ اسلام کانام ضوک تھااورآپ یاردکے بیٹھے تھے۔آپ علیہ اسلام نے365 برس کی عمرپائی اورپھرمع جسم خاکی آسمان پراٹھالیے گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں