35 سال ہماری وجہ سے اسمبلی میں راج کرنیوالے ہماراحساب دیں سڑک کی پختگی میں مزیدتاخیرہوئی احتجاج کرینگے،حافظ سلطان محمودواہلیان کینٹ

گوئی(www.dailyajknews.com)ہم اس وقت بھی پتھردورکی زندگی گزارنے پرمجبورہیں۔ہماری روڈنہ ہونے کی وجہ سے مریضوں کوتین کلومیٹرتک کندھوں پر اٹھا کرلا ناپڑتا ہے ۔ہمارے گاؤں میں نہ پانی ہے نہ بجلی۔300 گھروں پرایک ٹرانسفارمرنصب ہے۔ہمارے ساتھ جانوروں سے بدترسلوک سمجھ سے بالاترہے۔300 گھروں کیلئے ایک ٹرانسفارمرہونے کی وجہ سے وہ متعددبارخراب ہوچکاہے۔بجلی اورسڑک نہ ہونے کی وجہ سے ہمارے بچے تعلیم سے بھی محروم ہوجاتے ہیں۔سڑک کی عدم تعمیرمیں ملک نوازکے پاس متعدد چکرلگاچکے ہیں لیکن ملک نوازٹھیکیدارپرساراالزام ڈال کرخودبری ہوجاتے ہیں ۔ ٹھیکیدارجمشیدسے ٹھیکہ واپس لے کرکسی اور ٹھیکیدارکوآلاٹ کیاجائے تاکہ ہماری محرومیوں کاازالہ ہوسکے۔ان خیالات کااظہارحافظ سلطان محمود ،صوبیدارمیجرلال حسین ،ماسٹر مح مداسماعیل ،حو الدا ر محمد سید ، چوہدری محمدحنیف،چوہدری شفیع محمد،صوفی محمداسماعیل،محمدآفتاب،محمداخلاق،محمدریاض،حوالدار محمدفریاد ،محمد یونس ،محمد خلیل ،محمد بشیر،محمدصغیر،محمدرزاق ودیگرمعززین علاقہ کینٹ نے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ ہم نے ہمیشہ سابق سینئروزیرملک نوازکوووٹ دیئے مگرہماری سڑک تاحال پختگی میں تاخیرکاشکارہے۔جب بھی ملک نوازسے سڑک کی عدم تعمیربارے رابطہ کیاتوانہوں نے ساراالزام ٹھیکیدارپرڈال کرخودبری ہوجاتے ہیں۔ہمیں سڑک چاہیے ہمیں ٹھیکیداریاکسی اورچیزسے غرض نہیں ہے۔سڑک کاٹھیکہ ٹھیکیدارجمشیدکے پاس ہے ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ اس سے یہ ٹھیکہ واپس لیکرکسی اورکوٹھیکہ الاٹ کیاجائے۔حافظ سلطان محمدمحموداوردیگرمعززین کینٹ نے مزیدکہاکہ اگرہماری سڑک پختہ نہ ہوئی توسخت احتجاج کرینگے ۔جنہیں ہم نے ووٹ دیئے ان کے اندراحساس نام کی چیزنہیں ہے۔ایک ٹرانسفارمر300 گھروں کیلئے مختص کرناکہاں کاقانون ہے۔ہرپانچ سال بعدالیکشن آتے ہیں یہ بات انہیں یادرکھنی چاہیے کہ ووٹ عوام دیتے ہیں تویہ اقتدارکی کرسی پربرجمان ہوتے ہیں۔اب عوام ان لیڈروں کے جھانسیں میں نہیں آئینگے جوکام کرینگاوہ ہی ووٹ کاحقدارہوگا۔اب نام نہادبرادریوں کے برجوں اورٹھیکیداروں کے کہنے پرووٹ نہیں دینگے بلکہ جوکام کرینگااسی کوووٹ دینگے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں